انکی اوقات اتنی ہے کہ امریکا کا کوئی نمائندہ آتا ہے تو سیدھا آرمی چیف کے پاس جاتا ہے ،آرمی چیف نہ ملے ،تو جائنٹ چیف کے پاس جب سب سے مل لیتا ہے تو سیاستدانوں کے ساتھ فوٹو سیشن ہوتا ہے کسی سیاستدان کی جرات نہیں کہ کسی سے پوچھے حکومت ہماری ہے حاکم ہیں تم ہمارے ماتحت سے کیوں بواسیر ٹھیک کرواتے ہو جب بھی کوئی پھوڑا امریکیوں کو نکلتا ہے آتے وہی ہیں ،اگر سپر پاور ہیں تو آرمی چیف کو بلائیں سی پیک سید پرویز مشرف کی ویژن تھی ،اور چینیوں نے گارنٹی بھی پاک فوج سے لی ،اور سارا معاملہ دیکھ بھی فوج رہی ہے گوادر ایک فوجی نے خریدا تھا اس ملک میں حکمران کوئی کام فوج کے بغیر نہیں کر سکتے کس ملک میں فوج پولیو کے قطرے پلاتی ہے کس ملک میں فوج مردم شماری کرتی ہے کس ملک میں فوج الیکشن کرواتی ہے کس ملک میں فوج کوئی بس کھائی میں گر جائے تو نکالتی ہے کس ملک میں فوج لینڈ سلائڈنگ کو کلیئر کرتی ہے کس ملک میں فوج آگ بجھاتی ہے کس ملک میں فوج پولیس والی ڈیوٹیاں کرتی ہے کس ملک کی فوج سیلاب میں پھنسے لوگوں کو نکالتی ہے کس ملک میں فوج گھر گھر دہشت گردوں کو ڈھونڈتی ہے کس ملک میں فوج ڈیم بناتی ہے کس ملک میں فوج سڑکیں بناتی ہے کس ملک میں فوج سکول بناتی ہے کس ملک میں فوج خود سکول بنا کر اسی میں خود پڑھاتی بھی ہے کس ملک میں فوج کرکٹ کھیلنے والوں کی تربیت کرتی ہے کس ملک میں فوج سیاستدانوں کے گھروں پر پہرہ دیتی ہے کہیں نہیں ،بے شک فوج ملک کی ہے ملک کیلئے ہے انڈیا کی 16 لاکھ فوج سوائے کشمیر کے کسی جگہ ڈیوٹی پر نہیں بیرکوں میں ہے امیریکا ،برطانیہ کی فوج کبھی اپنے ملک میں ٹیکے نہیں لگاتی اب نئی بیماری شروع ہوگئی ہے ،فوج اقتدار بھی ہمیں پلیٹ میں رکھ کے دے دے ورنہ وہ خلائی مخلوق ہے ،تم سے تمہاری بیٹی نہیں سنمبھالی جاتی وہ بھی اگر فوج نہ ہوتی تو بارڈر کراس کر گئی ہوتی ،یہ تو بھلا ہو چار کور کا کمرہ دیا ورنہ ساری عمر ڈھونڈھتے رہتے سی آئی اے کو پاکستانی فوج اور آئی ایس آئی سے تکلیف ہے ہو بہو وہی تکلیف بھارت اور اسکی ایجنسی راء کو ہے عین ہی وہی تکلیف موساد کو ہے عین ہی وہی تکلیف کے جی بی کو تھی بلکل ہو بہو وہی بواسیر ایم آئی 6 کو ہے اور تو کیا پدی اور کیا پدی کا شوربہ افغانستان کو بھی وہی تکلیف ہے محمود اچکزئی کو وہی تکلیف ،منظور پشتین کو وہی تکلیف فضل اللہ کو وہی تکلیف ،مولوی عزیز کو وہی تکلیف ،اسفند یار کو وہی سیاستدانوں کو وہی تکلیف ہے لیکن بے چارے سارے کچھ کر نہیں سکتے صرف دندلیاں دکھاتے ہیں جنکے باپ کاکروچ دیکھ کر ڈر جاتے تھے وہ بھی مشرقی پاکستان کا طعنہ دیتے ہیں جو ڈر کے مارے سات سال سعودی محل سے نہیں نکلے وہ بھی شیر بنے پھرتے ہیں تم سب اس لیئے جھوٹے ہو اور بزدل ہو کیونکہ چور ہو اور فوج ماتحت ادارہ ہوکر بھی اور اکیس کروڑ آبادی کی صرف سات لاکھ فوج اس لیئے چھاتی تان کے قوم میں جاتی ہے کہ قوم کا بچہ بچہ انہیں سیلوٹ کرتا ہے کیونکہ وہ بچہ بھی جانتا ہے فوج چور نہیں ،اور بھروسہ کرتا ہے یہ بھروسہ یقینا تم بھی پیدا کر سکتے ہو لیکن ایمانداری سے حالت یہ ہے تمہاری اور کہتے ہو کہ تم شیر ہو کہ کبھی خفیہ ہاتھ کہتے ہو کبھی خلائی مخلوق اور جب جنرل تمہاری طرف دیکھتا ہے تو منہ لٹکا کے کہتے ہماری مراد کسی اور سے تھی ،آپ تو ہمارے ہیں اصل چور تہاڈے اندر نیں عوام ایماندار اور سچے کے ساتھ ہوتے ہیں انکی اوقات اتنی ہے تحریر شبانہ برکت ۔


  • ہفتہ
  • 2018-06-09
انکی اوقات اتنی ہے کہ امریکا کا کوئی نمائندہ آتا ہے تو سیدھا آرمی چیف کے پاس جاتا ہے ،آرمی چیف نہ ملے ،تو جائنٹ چیف کے پاس جب سب سے مل لیتا ہے تو سیاستدانوں کے ساتھ فوٹو سیشن ہوتا ہے کسی سیاستدان کی جرات نہیں کہ کسی سے پوچھے حکومت ہماری ہے حاکم ہیں تم ہمارے ماتحت سے کیوں بواسیر ٹھیک کرواتے ہو جب بھی کوئی پھوڑا امریکیوں کو نکلتا ہے آتے وہی ہیں ،اگر سپر پاور ہیں تو آرمی چیف کو بلائیں سی پیک سید پرویز مشرف کی ویژن تھی ،اور چینیوں نے گارنٹی بھی پاک فوج سے لی ،اور سارا معاملہ دیکھ بھی فوج رہی ہے گوادر ایک فوجی نے خریدا تھا اس ملک میں حکمران کوئی کام فوج کے بغیر نہیں کر سکتے کس ملک میں فوج پولیو کے قطرے پلاتی ہے کس ملک میں فوج مردم شماری کرتی ہے کس ملک میں فوج الیکشن کرواتی ہے کس ملک میں فوج کوئی بس کھائی میں گر جائے تو نکالتی ہے کس ملک میں فوج لینڈ سلائڈنگ کو کلیئر کرتی ہے کس ملک میں فوج آگ بجھاتی ہے کس ملک میں فوج پولیس والی ڈیوٹیاں کرتی ہے کس ملک کی فوج سیلاب میں پھنسے لوگوں کو نکالتی ہے کس ملک میں فوج گھر گھر دہشت گردوں کو ڈھونڈتی ہے کس ملک میں فوج ڈیم بناتی ہے کس ملک میں فوج سڑکیں بناتی ہے کس ملک میں فوج سکول بناتی ہے کس ملک میں فوج خود سکول بنا کر اسی میں خود پڑھاتی بھی ہے کس ملک میں فوج کرکٹ کھیلنے والوں کی تربیت کرتی ہے کس ملک میں فوج سیاستدانوں کے گھروں پر پہرہ دیتی ہے کہیں نہیں ،بے شک فوج ملک کی ہے ملک کیلئے ہے انڈیا کی 16 لاکھ فوج سوائے کشمیر کے کسی جگہ ڈیوٹی پر نہیں بیرکوں میں ہے امیریکا ،برطانیہ کی فوج کبھی اپنے ملک میں ٹیکے نہیں لگاتی اب نئی بیماری شروع ہوگئی ہے ،فوج اقتدار بھی ہمیں پلیٹ میں رکھ کے دے دے ورنہ وہ خلائی مخلوق ہے ،تم سے تمہاری بیٹی نہیں سنمبھالی جاتی وہ بھی اگر فوج نہ ہوتی تو بارڈر کراس کر گئی ہوتی ،یہ تو بھلا ہو چار کور کا کمرہ دیا ورنہ ساری عمر ڈھونڈھتے رہتے سی آئی اے کو پاکستانی فوج اور آئی ایس آئی سے تکلیف ہے ہو بہو وہی تکلیف بھارت اور اسکی ایجنسی راء کو ہے عین ہی وہی تکلیف موساد کو ہے عین ہی وہی تکلیف کے جی بی کو تھی بلکل ہو بہو وہی بواسیر ایم آئی 6 کو ہے اور تو کیا پدی اور کیا پدی کا شوربہ افغانستان کو بھی وہی تکلیف ہے محمود اچکزئی کو وہی تکلیف ،منظور پشتین کو وہی تکلیف فضل اللہ کو وہی تکلیف ،مولوی عزیز کو وہی تکلیف ،اسفند یار کو وہی سیاستدانوں کو وہی تکلیف ہے لیکن بے چارے سارے کچھ کر نہیں سکتے صرف دندلیاں دکھاتے ہیں جنکے باپ کاکروچ دیکھ کر ڈر جاتے تھے وہ بھی مشرقی پاکستان کا طعنہ دیتے ہیں جو ڈر کے مارے سات سال سعودی محل سے نہیں نکلے وہ بھی شیر بنے پھرتے ہیں تم سب اس لیئے جھوٹے ہو اور بزدل ہو کیونکہ چور ہو اور فوج ماتحت ادارہ ہوکر بھی اور اکیس کروڑ آبادی کی صرف سات لاکھ فوج اس لیئے چھاتی تان کے قوم میں جاتی ہے کہ قوم کا بچہ بچہ انہیں سیلوٹ کرتا ہے کیونکہ وہ بچہ بھی جانتا ہے فوج چور نہیں ،اور بھروسہ کرتا ہے یہ بھروسہ یقینا تم بھی پیدا کر سکتے ہو لیکن ایمانداری سے حالت یہ ہے تمہاری اور کہتے ہو کہ تم شیر ہو کہ کبھی خفیہ ہاتھ کہتے ہو کبھی خلائی مخلوق اور جب جنرل تمہاری طرف دیکھتا ہے تو منہ لٹکا کے کہتے ہماری مراد کسی اور سے تھی ،آپ تو ہمارے ہیں اصل چور تہاڈے اندر نیں عوام ایماندار اور سچے کے ساتھ ہوتے ہیں پاک فوج زندہ باد ،پاکستان پائندہ باد ۔